پاکستان اسٹاک ایکسچینج، فروخت کا دبائو برقرار، مندی کا تسلسل جاری، کے ایس ای 100 انڈیکس میں مزید 555پوائنٹس کم
| |
Home Page
اتوار یکم رمضان المبارک 1438ھ 28 مئی 2017ء
May 19, 2017 | 12:00 am
پاکستان اسٹاک ایکسچینج، فروخت کا دبائو برقرار، مندی کا تسلسل جاری، کے ایس ای 100 انڈیکس میں مزید 555پوائنٹس کم

Todays Print

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں فروخت کا دباؤ برقرار رہنے سے مندی کا تسلسل جاری، کے ایس ای 100 انڈیکس میں مزید 555پوائنٹس کم ہو گیا، مارکیٹ سرمایہ میں بھی 56 ارب 22 کروڑ 57 لاکھ 12 ہزار 567 روپے کی کمی رونما ہوئی جبکہ خرید و فروخت میں بھی 6 کروڑ 96 لاکھ 74 ہزار 120 حصص کی مندی رہی۔ اسی طرح تجارتی حجم میں 6 ارب 2 کروڑ 53 لاکھ 98 ہزار 739 روپے کی کمی رہی۔ تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے چوتھے روز جمعرات کو پی ایس ایکس میں حصص کی فروخت کے دبائو اور مارکیٹ کریکشن کے باعث مندی کا رجحان رہا اورکے ایس ای 100 انڈیکس 554.81 پوائنٹس کی کمی سے 50956.60 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 451.75 پوائنٹس کی مندی سے 26925.02 پوائنٹس پر بند ہوا۔ اسی طرح کے ایس سی آل شیئر انڈیکس میں 179.91 پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ کے ایم آئی 30 انڈیکس میں 1335.56 پوائنٹس کی مندی رونماء ہوئی۔ مزیدبرآں بینکس ٹریڈ ایبل (بی اے ٹی آئی) انڈیکس 421 پوائنٹس کی کمی سے 21089.83 پوائنٹس پر بند ہوا جبکہ آئل اینڈ گیس ٹریڈ ایبل (او جی ٹی آئی) انڈیکس 291.81 پوائنٹس کی مندی سے 18100.23 پوائنٹس پر بند ہوا۔ پی ایس ایکس - کے ایم آئی انڈیکس 133.47 پوائنٹس کی کمی سے 24565.45 پوائنٹس پر بند ہوا۔ مارکیٹ میں مجموعی طور پر 410 کمپنیوں کے حصص کا لین دین ہوا جن میں سے 182 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 210 کمپنیوں کے حصص کے بھائو میں مندی اور 18 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ سب سے زیادہ تیزی نیسلے پاکستان کے حصص کی قیمت میں ہوئی جس کے حصص کی قیمت 350 روپے کے اضافے سے 10000 روپے پر بند ہوئی۔ اسی طرح آئی سی آئی پاکستان کے حصص کی سودے بھی 52.31 روپے کی تیزی سے 1163.31 روپے پر بند ہوئے۔ سب سے زیادہ مندی شپہائر فائبر ایکس ڈی اور یونی لیور فوڈز کے حصص کی قیمتوں میں ہوئی۔ شپہائر فائبر ایکس ڈی کے حصص کی قیمت 61.68 روپے کی مندی سے 1265 روپے اور یونی لیور فوڈز کے حصص کی قیمت بھی 38 روپے کی کمی سے 6162 روپے رہ گئی۔ سب سے زیادہ کاروبار ورلڈ کال ٹیلی کام کے حصص میں ہوا جو 3 کروڑ 24 لاکھ 63 ہزار شیئرز رہا جس کی قیمت 3.29 روپے سے شروع ہو کر 3.38 روپے پر بند ہوئی جبکہ اینگرو پولیمر کے 1 کروڑ 51 لاکھ 17 ہزار 500 حصص کے سودے 30.90 روپے سے شروع ہو کر 31.10 روپے پر بند ہوئے۔ مجموعی طور پر 30 کروڑ 21 لاکھ 27 ہزار 130 حصص کا کاروبار ہوا جس کا تجارتی حجم 12 ارب 10 کروڑ 79 لاکھ 72 ہزار 609 روپے رہا۔ مارکیٹ کیپیٹل 101 کھرب 61 ارب 15 کروڑ 18 لاکھ 22 ہزار 246 روپے سے کم ہو کر 101 کھرب 4 ارب 92 کروڑ 61 لاکھ 9 ہزار 679 روپے رہ گیا۔ فیوچر ٹریڈنگ میں 103کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں تیزی، 22 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں مندی اور 1 کمپنی کے حصص کی قیمت میں استحکام رہا جبکہ 2 کروڑ 18 لاکھ 5 ہزار 500 حصص کا کاروبار ہوا۔