| |
Home Page
ہفتہ 27 شوال المکرم 1438ھ 22 جولائی 2017ء
عدنان رنداھاوا
تماشائے اہل کرم
July 22, 2017
شر میں خیر کا پہلو

پانامہ اسکینڈل پر جاری ہنگامہ کس کروٹ بیٹھے گا، اس بارے میں مختلف منظر نامے پیش کئے جا رہے ہیں۔ ایک اہم منظر نامہ جسے اتنی آسانی سے رد نہیں کیا جا سکتا، یہ ہے کہ نواز شریف بالآخر نا اہل ہو جائیں گے۔ انکے بعد پھر عمران خان کی باری آئے گی اور وہ بھی اسی طرح عدالتی کارروائی کے ذریعے نا اہل ہونگے۔ اس صورت میں "کچھ لوگ" کبھی بھی نہیں...
July 16, 2017
استعفیٰ کون دے؟

سب اسٹیبلشمنٹ کا کیا دھرا ہے۔ کہتے ہیں نواز شریف نے کرپشن کی ہے، اس لئے استعفیٰ دے۔ وہی پرانا گھسا پٹا اسکرپٹ جو ہر سویلین دور حکومت میں پاکستانی سیاست کے باکس آفس کیلئے خصوصی طور پر ریلیز ہونے والی فلموں کا ہوتا ہے۔ کل کی بات ہے آصف زرداری نشانے پر تھے، روز خبریں آتیں یا دی جاتیں کہ زرداری استعفیٰ دے رہے ہیں، انکو فالج ہو گیا...
July 08, 2017
جےآئی ٹی کے تھیلے کی بلی

میائوں میائوں کی آوازیں تو پہلے ہی آنا شروع ہو گئی تھیں بالٓاخر، اب بلی بھی تھیلے سے باہر آ گئی ہے۔ جے آئی ٹی کی جو رہی سہی ساکھ تھی حالیہ خبروں سے وہ بھی خاک ہو گئی۔ زیادہ عرصہ نہیں ہوا میرا خیال تھا کہ جے آئی ٹی اور شریف خاندان کے خلاف سپریم کورٹ کی موجودہ کارروائی کو باوجود خامیوں کے سپورٹ کرنا چاہئے کیونکہ ہمارے ہاں مثالی...
July 01, 2017
پارٹی ابھی باقی ہے میرے دوست

سیاسی میدان گرم ہے۔ دو سیاسی قوتیں نبرد آزما ہیں۔ ایک نواز شریف کی پارٹی ہے اور ایک وہ پارٹی ہے جو ستر سال سے ملک پر حکومت کر رہی ہے۔ اس کشمکش میں دوسری پارٹی کا چہرہ اگرچہ عمران خان اور انکی پارٹی ہے، لیکن تحریک انصاف سے اگر عمران خان کی مشہور و معروف "انگلی" نکال دی جائے تو پیچھے کیا بچے گا؟ چند لوٹے، کچھ کھوٹے سکے اور کباڑیے کی...
June 17, 2017
جے آئی ٹی اور کمال پرستی کا جنون؟

کمال کرنے کی جستجو زندگی میں جہاں آگے بڑھنے کیلئے ایک انتہائی اہم تحرک اور ترغیب کی حیثیت رکھتی ہے، وہیں اسکی زیادتی زندگی کو جہنم بھی بنا دیتی ہے۔ علم نفسیات کی جدید تحقیق کے مطابق بہت سے نفسیاتی عارضوں کے پیچھے کمال پرستی (perfectionism) کی عادت کارفرما پائی جاتی ہے۔ ہوتا یوں ہے کہ بعض اوقات انسان خود کو کمال پرستی کے جنون میں مبتلا...
June 13, 2017
وزیر اعظم حاضر ہوں!!

بالآخر وہ لمحہ آ گیا جسکا انتظار ہماری ارتقا پذیر جمہوریت کو عرصے سے تھا۔ جمہوریت نے اپنی طاقت سب کے سامنے آشکار کر دی ہے۔ تیسری دفعہ منتخب ہونے والے وزیر اعظم جنکی پارلیمنٹ میں بھاری اکثریت ہے، جنکی حلقہ جاتی طاقت ابھی بھی موثر اور انکی ذات کے گرد مرتکز ہے، جو طاقتور اشرافیہ سے تعلق رکھتے ہیں، جو چوتھی دفعہ وزیر اعظم بننا...
June 03, 2017
جمہوری فیصلہ سازی اور میڈیا کی آزادی

14اکتوبر، 1945 کے روز کلکتہ کے ایک انگریزی اخبار The Statesman نے بالآ خر عرصے سے جاری میڈیا سنسر شپ کی پالیسی ختم کرنے کا فیصلہ کیا اور برطانوی وزیر برائے انڈیا کی برطانوی پارلیمان میں کی گئی تقریر کو ایک ادارئیے میں آڑے ہاتھوں لیا۔ نہ صرف یہ بلکہ اس اخبارنے 16اکتوبر کو ایک دوسرا اداریہ کچھ یوں لکھا، "جب تک کہ وزیر انڈیا کے ماتحت ان کو غلط...
May 29, 2017
یہ وہاں کر کیا رہے ہیں؟

کوئی ایک مہینہ ہوا ہو گا، ایک عوامی ہوٹل میں چائے کی چسکیاں لے رہا تھا کہ ساتھ والی میز پر ہونے والی گفتگو نے اپنی طرف متوجہ کیا۔ ’’اللہ کا شکر ہے بالآخر مسلمانوں کو عقل آ گئی‘‘ ایک باریش آدمی نے اپنی مہندی لگی سرخ داڑھی پر ہاتھ پھیرتے ہوئے اپنے ساتھیوں کو بتایا۔ ’’اتنی سی بات ہمارے حکمرانوں کو سمجھ نہیں آ رہی تھی کہ دنیا کا...
May 20, 2017
جمہوری فیصلہ سازی اور عوامی مباحثہ

جمہوریت کی روح یعنی جمہوری فیصلہ سازی کا عمل عوامی مباحثے (Public Debate) یا کھلے مباحثے (Open Debate) کے بغیر ناممکن ہے۔ آمریت اور مطلق العنانیت میں بھی فیصلے بحث مباحثے کے بعد ہی ہوتے ہیں لیکن یہ بحث مباحثہ آمر یا بادشاہ کے ایک قریبی حلقے جسے کوئی عوامی مینڈیٹ حاصل نہیں ہوتا، کے اندر محدود ہونے کی وجہ سے عوامی مباحثہ نہیں کہلا سکتا۔ اس قسم...
May 13, 2017
یہ کوئی جمہوریت ہے؟

پچھلے کالم میں ذکر کیا تھا کہ جمہوریت کی روح دراصل جمہوری فیصلہ سازی ہے۔ کوئی نظام حکومت کتنا جمہوری ہے یہ جاننے کیلئے بنیادی کسوٹی بھی جمہوری فیصلہ سازی ہے۔ جس قدر حکومت کو چلانے کیلئے فیصلہ سازی جمہوری انداز سے ہو گی اتنا ہی اس نظام حکومت کو جمہوری کہا جا سکتا ہے۔ جمہوری فیصلہ سازی اگر منزل ہے تو اسکو حاصل کرنے کے کئی ذریعے ہیں...
May 06, 2017
جمہوریت کی روح، جمہوری فیصلہ سازی

چند نوکری پیشہ افراد، کاروباری منافع خوروں اور پیشہ ور سیاستدانوں کی بجائے کروڑوں لوگوں کو اپنی زندگیوں کے فیصلے خود کرنے کا اختیار دلوانے کا جمہوری خواب ابھی تک تشنہ تکمیل ہے۔ ہمارے ہاں تو جھوٹی اور بچگانہ تاریخ پڑھائی جاتی ہے لیکن مغرب میں تاریخ اور انسانی نفسیات پر ہوش ربا تحقیق ہوئی ہے اور اس کے نتیجے میں یہ حقیقت سامنے آئی...
April 29, 2017
قومی دھارے میں واپسی کا پروجیکٹ

کالعدم تنظیموں کے بارے میں ایک عرصے سے ریاست مخمصے کا شکار رہی ہے۔ وقت اور حالات بدلتے ہیں تو خواہ کوئی فرد ہو، معاشرہ ہو یا ریاست، ہر کسی کو اپنے آپ کو بدلنا پڑتا ہے۔ وقت کے ساتھ نہ بدلنے یا سستی کا مظاہرہ کرنے کی قیمت چکانی پڑتی ہے۔ کالعدم تنظیموں کے بارے میں ہمارے ہاں کچھ اسی طرح کا معاملہ ہوا ہے۔ اس معاملے کا تفصیلی تجزیہ کرنے...
April 25, 2017
بارہ منٹ

ایٹمی سائنسدانوں کی ایک تنظیم نے شکاگو یونیورسٹی میں جو علامتی "قیامت کی گھڑی" (Doomsday clock) آویزاں کر رکھی ہے وہ 1953 کے بعد جب امریکہ نے ہائیڈروجن بم کا تجربہ کیا تھا، اس وقت سےخطرناک ترین وقت بتا رہی ہے۔ 1947میں ایٹمی سائنسدانوں نے اپنی تمام تر تحقیق کی روشنی میں اس گھڑی پر جو ٹائم سیٹ کیا تھا وہ رات بارہ بجنے (ممکنہ ایٹمی تباہی کا وقت)...
April 15, 2017
کیا تاریخی زنجیر شدت پسندی سے ٹوٹے گی ؟

مردان یونیورسٹی میں کیا ہوا؟ چند سال کیا کیا ظلم ڈھا گئے! یہ چند سال جو ہم نے اپنی آنکھوں کے سامنے وا ہوتے ہوئے دیکھے!جب بھی تاریخ کے رازوں کے کھوج میں نکلا، آثارِ قدیمہ کی بھول بھلیوں میں راستہ ڈھونڈنے کی کوشش کی، تباہ حال تہذیبوں کی گتھیوں کی رمز ربائی کی تگ و دو میں خود کو گم پایا، ایک نکتے پر آ کر ٹھٹھر گیا کہ آخر اتنی ترقی...