Ajmal Khattak Kashar - Urdu Columns Pakistan | Jang Columns
| |
Home Page
ہفتہ 27 شوال المکرم 1438ھ 22 جولائی 2017ء
اجمل خٹک کثر
July 16, 2017
کیا بے لاگ احتساب شروع ہوچکا

پاکستان میں ایک عرصے سے یہ بات زبانِ زد عام ہے کہ کوئی امام خمینی جیسا آئے، اور بلا امتیاز لٹیروں کو چوراہوں پر لٹکائے۔ یہ عمل انقلاب کے بغیر ممکن نہیں، اور پاکستان میں ایسے کسی عوامی انقلاب کی تمام تر راہیں ابن الوقت سیاستدانوں، اسٹیبلشمنٹ اور ان کے حلیف مذہبی عناصر نے چونکہ مسدود کررکھی ہیں، لہٰذا بے لاگ احتساب کی باتیں کرنے...
July 10, 2017
وزیر اعظم رخصت ہورہے ہیں!

’’وزیر اعظم رخصت ہورہے ہیں۔‘‘ نہ تو میاں صاحب کے خلاف قومی اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد آئی ہے ، نہ ہی پارلیمنٹ میں مواخذے کی کوئی تحریک، اور نہ ہی وزیر اعظم موصوف نے خود استعفیٰ کا کوئی عندیہ دیا ہے، پھر یقین سے یہ بات عام کیوں ہے کہ وزیر اعظم رخصت ہورہےہیں.... جمہوری دنیا میں منتخب وزیراعظم کو ان کے منصب سے ہٹانے کے متذکرہ...
July 02, 2017
سب کا اپنا اپنا چاند

آپ نے اکثر سنا ہو گا کہ کہا جاتا ہے کہ دنیا چاند پر پہنچ گئی ہے اور ہم وہیں کے وہیں ہیں۔ ایسا کہنے والے مگر یوں کوتاہ نظر ہیں کہ انہیں یہ نظر ہی نہیں آسکا ہے کہ ہم کئی سال قبل بلکہ برسوں سے چاند پر نہ صرف یہ کہ پہنچ چکے ہیں بلکہ یہ بھی دریافت کر لیا ہے کہ چاند ایک نہیں دو ہیں! اور یہ کارنامہ کسی اورنے نہیں، ان صاحبان کا ہے جن کے متعلق...
June 25, 2017
غربت، سیاست اور کرکٹ

ایک جگہ بیٹھک تھی، سوال کیا گیا کہ افغانستان میں مسلمانوں کے مختلف فرقے برسوں سے آباد ہیں، لیکن وہاں کبھی فرقہ وارانہ تصادم نہیں ہوا۔ دوسرے صاحب نے کہا کہ ہندوستان میں شیعہ سنی یا دیو بندی بریلوی مسئلہ کیوں کبھی عداوت پذیر نہیں ہوا، ایک اور صاحب کا کہنا یہ تھا کہ ایک دو ممالک نہیں ، پوری دنیا میں  شیعہ سنی یا کوئی مسلکی تنازع...
June 18, 2017
کیا یہ بچے پاکستانی نہیں

تھوڑی بینائی رکھنے والے کو بھی نظرآرہا ہے کہ پاکستان کی غالب اکثریت غربت کے اژدھے کے خوفناک جبڑوں میں بے بس پڑی کراہ رہی ہے۔ لیکن مختلف مناصب پر فائز اختیار مند دیگر مشغلوں میں ایسے منہمک ہیں کہ انہیں یہ نظرہی نہیں آرہا ہے کہ ہر تیسرا پاکستانی غربت کی گرفت میں لاچار ہوچکا ہے ۔صد حیف! 18کروڑ کی آبادی میں سے 5کروڑ ستاسی لاکھ افراد...
June 11, 2017
نئی ق لیگ اورپیپلز پارٹی

پاکستان کی سیاسی تاریخ مہم جوئی، سینہ زوری اور رسہ کشی سے عبارت ہے۔المیہ یہ بھی ہے کہ مملکت خداداد پاکستان کے دو لخت اورباقی ماندہ میں عوام کی زندگی اجیرن ہونے کے باوجودتکبر پسند رجوع کرنے کیلئے تیار نہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ ملک کی 60فیصد آبادی خطِ غربت سے نیچے یعنی یومیہ دو سو روپے ہی کما پاتی ہے,40فیصد بچے خوراک سے محروم ہیں،آدھی...
June 04, 2017
پیپلز پارٹی، اے این پی میں فاصلے

رمضان المبارک سے چند روز قبل اے این پی کے سربراہ اسفند یار ولی خان کراچی تشریف لائے ۔ اس موقع پر انہوں نے ایک بڑے جلسے سے خطاب کیا۔ بلاشبہ یہ مثالی جلسہ اے این پی کے صوبائی سربراہ سینیٹر شاہی سید کی کاوشوں کا مظہر تھا۔ جناب اسفند یار صاحب اگرچہ علیل تھے لیکن چھ سات سال بعد اے این پی نے سندھ بالخصوص کراچی میں چونکہ سیاسی سرگرمیوں کے...
May 28, 2017
قومی یکجہتی اور اسفندیار ولی کا خطاب

گزشتہ اتوار اے این پی سندھ کے نام رہا۔ اس روز 21مئی2017ء کو پارٹی کے صوبائی سربراہ سینیٹر شاہی سید نے گزشتہ6 برس سے اے این پی پر لاگو غیر اعلانیہ پابندی توڑنے کا اعلان کیا تھا۔ پارٹی کے سربراہ اسفندیار ولی خان، جس کے لئے علالت کے باوجود پختونخوا سے کراچی آئے تھے۔ سیکرٹری جنرل میاں افتخار حسین بھی آپ کے ہم رکاب تھے۔ اے این پی جو...
May 22, 2017
دو ستارے، یونس خان ، مصباح الحق نیازی

مایہ ناز یونس خان پاکستان کی جانب سے ٹیسٹ کرکٹ میں سب سے زیادہ 10099رنز سمیت متعدد ریکارڈ لئے دنیائے کرکٹ کو خیرباد کہہ گئے۔ ڈومینیکا ٹیسٹ کے پانچویں دن آخری بار جب وہ قابلِ فخر مصباح الحق کے ہمراہ میدان میں داخل ہوئے، تو پاکستانی کرکٹرز نے قطار بنا کر اپنے ہیروز کو خراج تحسین پیش کیا۔ اس سے قبل پاکستانی ڈریسنگ روم کا منظر بھی...
May 20, 2017
تائب مجاہدین کے پاکستانی سہولت کار!

5مئی کو موقر انگریزی روزنامے کے انٹرنیشنل صفحہ پر 5کالمی ایک تصویر ہے۔ جس میں کسی بات پر قہقہے کے بعد افغان صدر اشرف غنی، حامد کرزئی، عبداللہ عبداللہ، عبدالرسول سیاف اور گلبدین حکمت یار مسکراتے ہوئے کابل میں داخل ہورہے ہیں۔ یہ تصویر حکمت یار کی کابل واپسی پر ان کے استقبال کے موقع پر لی گئی ہے۔ تصویر میں اشرف غنی کے ماسوا تمام وہ...
May 14, 2017
خوشحال خان خٹک اور پاکستان ریلوے

انگریز جب ہندوستان آئے تو انہوں نے پختونوں سے بلا واسطہ رابطہ پیدا کرنے کیلئے ان کی زبان سیکھنے کی ضرورت محسوس کی اور نصابی کتب کے علاوہ زبان و ادب میں بھی دلچسپی لی۔دراصل یہ ایک نہایت گہری سیاسی مہم تھی ۔بیرونی طاقتیں اس خطے میں اپنا اثر ورسوخ بڑھانے میں دلچسپی رکھتی تھیں، روس بھی اس سلسلے میں پیش پیش تھا لیکن ا نگریزشاطر اس دوڑ...
May 10, 2017
مشال کیس، اے این پی سے چند سوالات

ہفتہ رفتہ میں پختونخواجانا نصیب ہوا تو ایسا محسوس ہوا کہ پورا صوبہ مشال خان کے قتل کے واقعہ کے تاحال زیراثر ہے۔ عام لوگوں کی بات تو نہیں کرتے مگر جو صاحبانِ فکرونظر ہیں خواہ ان کا تعلق سیاست وتعلیم سمیت زندگی کے کسی بھی شعبہ سے ہو، ان کی غالب اکثریت دل گرفتہ ہے۔ واقعہ میں سیاسی ومذہبی جنونیوں کا کردار کیا تھا یا سماج نےکس بے حسی...
April 23, 2017
پھر کس پر سنگ اُٹھائوگے!

پاناما کے فیصلے پر سیاستدانوں کا غوغا اپنی جگہ!زندہ مگر بے روح اختیار مندوں سے مشال کی روح کا یہ سوال۔لائو تو قتل نامہ مرا میں بھی دیکھ لوںکس کس کی مہر ہے سرِ محضر لگی ہوئیتاحال تشنہ جواب ہے۔ عمران خان سے لے کر مولانا فضل الرحمٰن تک سب کہہ رہے ہیں، سازش ہے، مگر کسی میں یہ جرات اظہار نہیں کہ وہ بتائیں کہ یہ سازش کس نے کی! مشال کے معنی...
April 16, 2017
عمران خان ، مریم اورنگزیب اورنظامِ تعلیم

تحریک انصاف کے سربراہ، عمران خان کا کہنا ہے کہ ’’ایک قوم بنانے کے لئے ہمیں تین مختلف نظام تعلیم ختم کرنا ہوں گے۔‘‘ جہاں اس بیان سے قومی تفریق و انتشار کے خاتمے کے لئے ایک قابل عمل راہ کی نشاندہی ہوتی ہے۔ وہاں اس سےیہ بھی عیاں ہوتا ہے کہ دیو ہیکل بنیادی مسائل پر خان صاحب کی کتنی گہری نظر ہے۔خیبر پختونخوا میں تعلیمی اصلاحات کے...