| |
Home Page
منگل 28 جمادی الثانی 1438ھ 28 مارچ 2017ء
ڈاکٹر صفدر محمود
March 26, 2017
خوشی؟

سوچتا ہوں کہ اگر خوشی۔ حقیقی مسرت، خریدی جاسکتی اور دکانوں پر دستیاب ہوتی تو اس پر صرف دولت مندوں کی اجارہ داری ہوتی۔ یعنی خوشی صرف رئوسا کی لونڈی اور گھر کی باندی ہوتی اور غریب گھرانے اس سے محروم رہتے۔ قدرت اولاد آدم سے بے انصافی نہیں کرتی ا س لئے قدرت کے عطیے سب انسانوں کے لئے ہوتے ہیں۔خوشی قدرت عطیہ ہے اس پر کسی کلاس، طبقے یا...
March 24, 2017
چپ ہوں تو کلیجہ جلتا ہے بولوں تو تیری رسوائی ہے

کل 23مارچ تھی اس لئے قلم اس موضوع سے اِدھر اُدھر ہٹنے کو تیار نہیں حالانکہ مجھے ذاتی طور پر یوں محسوس ہوتا ہے جیسے قوم کا معتدبہ حصہ چودہ اگست، پچیس دسمبر اور تئیس مارچ جیسے تاریخی موضوعات میں خاصی حد تک دلچسپی کھو چکا ہے۔ اس کا اندازہ الیکٹرانک میڈیا کے رویے سے بھی ہوتا ہے جو اب ان موضوعات کو واجبی سی اہمیت اور کوریج دیتا ہے۔...
March 21, 2017
احساسِ زیاں جاتا رہا

22/23مارچ 1940ء کو مسلم لیگ کا لاہور میں اجلاس ہماری تاریخ کا روشن مینار اور اہم ترین سنگ میل اس لئے ہے کہ اس اجلاس میں مسلمان اکثریتی علاقوں پر مشتمل آزاد مملکت کا مطالبہ کیا گیا تھا جو ہندوستان کے مسلمانوں کے دل کی آواز تھا لیکن اس قرارداد کی منظوری کے بعد ان کا متفقہ اور اعلانیہ مطالبہ بن گیا۔ قرارداد لاہور یا قرارداد پاکستان کی...
March 19, 2017
مارچ کی تاریخی اہمیت

مارچ کا مہینہ ہماری قومی زندگی میں ایک منفرد حیثیت رکھتا ہے ۔یوں تو مارچ کے مہینے میں کئی اہم واقعات رونما ہوئے لیکن میری رائے میں جن تین اہم ترین واقعات نے مارچ کو ہماری تاریخ میں سنگ میل ماہ کی حیثیت دی وہ ہیں قرارداد لاہور جسے بعدازاں قرارداد پاکستان کہاگیا، قرارداد مقاصد جو 12مارچ 1949ء کو منظور ہوئی اور ہمارے 1956ء اور 1973ء کے...
March 17, 2017
بہارو پھول برسائو

ہولی کے کھلتے رنگ دیکھ کر ہمارے وزیر اعظم صاحب کے دل کا گلاب بھی کھل اٹھا اور ا ن کے اداس چہرے پر مسکراہٹ پھیل گئی۔ محمد رفیع کا مشہور گانا’’بہارو پھول برسائو، میرا محبوب آیا ہے‘‘ سن کر وزیر اعظم صاحب کو اپنا لڑکپن اور جوانی یاد آگئی جب دوستوں کے حلقے میں ان کے سریلے مدھر گانوں کی بڑی دھوم تھی۔ وزیر اعظم صاحب نے خود اپنی شخصیت...
March 14, 2017
حاضر

غازی علم الدین شہید (1908-1929)نے شاتم رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم ہندو پبلشر راج پال کو قتل کیا تو علامہ اقبالؒ نے ایک فقرے میں اپنی بے بسی اور خواہش دونوں کو سموتے ہوئے کہا ’’ہم باتیں کرتے رہ گئے اور ترکھان کا بیٹا بازی لے گیا‘‘۔ میرے کرم فرما مرحوم مولوی محمد سعید پرانے زمانے میں پاکستان ٹائمز کے ایڈیٹر رہے۔ وہ اس سارے واقعہ کے...
March 12, 2017
کیفیت

’’بان‘‘ کی ننگی چارپائی پہ لیٹے لیٹے انہوں نے بازو کو تکیہ بنایا اور پانسہ پلٹ کر چہرہ میری طرف کر لیا۔خاموشی کو توڑتے ہوئے کہنے لگے سوچتے کیا ہو اور متفکر کیوں ہو؟ فکر پڑھے لکھے لوگوں کا مرض ہے۔خواہ مخواہ پریشان رہتے ہیں۔قدرت کا ایک نظام ہے جس میں تم نہ دخل کر سکتے ہو نہ اسے سمجھ سکتے ہو۔پھر فکرمند ہونے کا کیا فائدہ؟بابا تم...
March 10, 2017
یہ صورت معجزے سے کم نہیں

اِسے آپ دیگ کا ایک دانہ اور آئس برگ کا چھوٹا سا ٹپ (Tip) سمجھیں۔ مسئلہ نہایت گمبھیر اور بنیادی سا ہے لیکن ہماری حکومتوں کی گورننس میں ترجیحات کے آخر میں جگہ پاتا ہے۔ چند روز قبل سینیٹ (Senate)میں ایک رپورٹ پیش کی گئی جس کے مطابق ملک بھر میں دس ہزار واٹر سپلائی اسکیموں کا سروے کیا گیا۔ پانی فراہم کرنے کی ان اسکیموں میں سے 72فیصد غیر فعال...
March 03, 2017
انسانی رشتے۔ جھوٹ اور فریب ِ نظر

اگر کوئی مجھ سے پوچھے کہ دنیا کی سب سے زیادہ نازک، عارضی اور ناقابل اعتبار شے کون سی ہے تو میرا جواب ہوگا انسانی تعلقات، انسانی رشتے۔ آپ کو یہ بات کتابوں میں لکھی ہوئی نہیں ملے گی لیکن اگرآپ کتاب زیست پڑھیں تو اس میں انسانی تعلقات اور رشتوں کی بے شمار کہانیاں ملیں گی۔ بلاشبہ نہ زندگی کا اعتبار ہے اور نہ ہی انسان کا۔ اس لئے کہا...
February 28, 2017
پاناما\۔توقعات اور اثرات؟

امید کے باغ کو ہرا بھر ا رکھنے میں کوئی حرج نہیں، توقعات کے چراغ جلائے رکھنے میں بھی کوئی حرج نہیں،کیونکہ مایوسی گناہ ہے۔ مایوسی بے عملی کو جنم دیتی ہے اس لئے امیدوں کے خواب پالنے میں کوئی مضائقہ نہیں۔ دراصل زندگی نام ہی ہے امیدوں، خوابوں اور حسن ظن کا ورنہ اگر زندگی سے امیدوں اور توقعات کو خارج کردیا جائے تو زندگی محض ایک فریب نظر...
February 26, 2017
تاریخ کی مختصر سی سیر

آپ ہر وقت گلستانِ سیاست کی کانٹوں بھری کلیاں چنتے رہتے ہیں اور پاناما سے لے کر دہشت گردی تک ذہنی الجھنوں کا شکار رہتے ہیں اس لئے مجھے خیال آیا کہ تبدیلی ٔذائقہ کے لئے آپ کو تھوڑی سی تاریخ کی سیر بھی کروائی جائے کیونکہ مفکرین متفق ہیں کہ تاریخ قوم کا حافظہ ہوتی ہے۔ حافظہ زوال پذیر ہو جائے اور یادداشت پر وقت کی گرد جمنے لگے تو اسے...
February 24, 2017
دارالفساد سے ردالفساد تک

جب کرپشن، باہمی منافرت، قتل و غارت، گھنائونے جرائم اور انتہا پسندی کا زہر معاشرے کے جسم میں سرایت کر جائے تو معاشرہ دارالفساد بن جاتا ہے۔ دارالفساد میں ہمہ وقت فسادات برپا ہوتے رہتے ہیں اور دہشت گردی انسانی خون کی ندیاں بہاتی رہتی ہے۔ دہشت گردی مذہبی منافرت، انتہا پسندی، کرپشن، نااہلی اور غربت کے سبب پھلتی پھولتی ہے۔ مذہبی...
February 21, 2017
خوگر ’’تنقید‘‘ سے تھوڑا سا ’’قصیدہ‘‘ بھی سن لے

مقبول عام مصرعے میں تھوڑی سی تبدیلی پر معذرت لیکن یہ ضرورت کا تقاضا تھی۔ میں عام طور پر حکومتی فیصلوں اور کارکردگی پر تنقید کرنے کا عادی ہوں۔ میری تنقید تجربے، مشاہدے اورمطالعے کی بنیاد پر ہوتی ہے اور حب الوطنی کی مجبوری کہلاتی ہے۔ اسی طرح آج کی تعریف بھی سچائی اور حق گوئی کا تقاضا ہے کیونکہ ہر حال میں مقصد وطن کی خدمت ہے۔ تو جناب...
February 19, 2017
رموز تخلیق

ڈاکٹر عبدالرشید صاحب کی فکر انگیز کتاب’’ رموز تخلیق‘‘ میرے سامنے ہے ۔اس کتاب کا موضوع قرآن مجید اور سائنسی علوم میں غوروفکر کرکے جدید سائنس کے چیدہ چیدہ نظریات اور تسلیم شدہ حقائق کی قرآن مجید کے مندرجات میں مطابقت تلاش کرنا ہے اور اس بات کا جائزہ لینا ہے کہ انسان اس کائنات کے بارے اب تک جو کچھ سمجھ پایا ہے وہ کس حد تک درست اور...