Riaz Ahmed Syed - Urdu Columns Pakistan | Jang Columns
| |
Home Page
ہفتہ 28 رمضان المبارک 1438ھ 24 جون 2017ء
ریاض احمد سید
سفارت نامہ
June 21, 2017
پاکستانی سفارت کاری کیلئے ایک ٹیسٹ کیس

زیادہ دن نہیں گزرے کہ ریاض میں عرب، اسلامک، امریکن سمٹ ہوئی تھی، ناسازی طبع کے باوجود امریکی صدر اور ان کے اہل و عیال کا استقبال شاہ سلمان نے بنفس نفیس کیا تھا۔ ’’ شہنشاہ معظم‘‘ کی سلامی کیلئے وزیر اعظم پاکستان سمیت39مسلم ممالک کے سربراہان بھی موجود تھے۔ مگر اس سارے ہنگامے سے کیا برآمد ہوا ؟ مسلم اتحاد کو اس سے کیا حاصل ہوا؟ اور...
June 11, 2017
خونی ٹوکہ

چند برس کی بات ہے کہ ہمارے قریبی گائوں کے ایک ہونہار لڑکے کے ساتھ انہونی ہو گئی۔ ایف ایس سی میں ایک ہزار کے لگ بھگ نمبر لینے کے بعد میڈیکل کالج کے لئے انٹری ٹیسٹ کی تیاری کر رہا تھا کہ ایک حادثے میں دایاں بازو کہنی سے ذرا نیچے تک کٹ گیا اور جان کے لالے پڑ گئے۔ طویل علاج کے بعد زخم تو بھر گیا، مگر خواب بکھر گئے اور بیچارہ معذور کوٹہ پر...
May 23, 2017
جندال ڈپلومیسی سے آستانہ تک

جب ریاستوں کے درمیان تلخی انتہائی حدوں کو چھونے لگے اوررابطے کی معروف راہیں محدودہوتی دکھائی دیں، تو ٹمپریچر کم کرنے کے لئے رابطے کی غیر معروف پگڈنڈیوں سے کام چلانے کی کوشش کی جاتی ہے۔ ٹیڑھی میڑھی راہوں کے اس سفر کو بیک ڈور ڈپلومیسی کے نام سے یاد کیا جاتا ہے۔ ایک طرح کی غیر روایتی سفارت کاری، جس نے کرہ ارض کو کئی بار یقینی تباہی سے...
May 06, 2017
کہتی ہے تجھے خلق خدا غائبانہ کیا

کشمیروںکی جدوجہد آزادی حال ہی میں مزاحمت کے ایک انوکھے طریق کار سے روشناس ہوئی ہے۔ کم عمر بچیاں ہاتھوںمیں کنکر لئے اچانک برآمد ہوتی ہیں اور قابض سپاہ پر ان کی بارش کر دیتی ہیں اور بھارتی سور مائوں کا یہ عالم ہےکہ معصوم بچیوں کی یورش کو برداشت کرنے کا حوصلہ بھی نہیںکر پا رہی۔ 9؍اپریل کو اسی قسم کے ایک ’’حملہ‘‘سے بچنے کے لئے...
April 21, 2017
سنئے !بلوچستان والے کچھ کہتے ہیں

مارچ2017کا آخری ہفتہ راقم نے بلوچستان میں گزارا۔ وزٹ کی نوعیت اسٹڈی ٹور سے ملتی جلتی تھی۔ میزبان حد درجہ مہربان اور مجھے ہر اس جگہ لے گئے جس کی میں نے خواہش کی، زیادہ تر فوکس گوادر پر رہا، کیونکہ شاندار مستقبل کی نوید کیلئے اس بستی کو اپنی آنکھوں سے دیکھنا چاہتا تھا ۔کو ئٹہ میں بھی مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والوں سے...
April 08, 2017
ڈھاکہ فوک فیسٹیول، نوراں سسٹرز، سہون شریف

پنجاب یونیورسٹی میں تھا کہ طلبا کے ایک گروپ کے ساتھ دسمبر 1969 میں پہلی بار مشرقی پاکستان جانے کا اتفاق ہوا تھا اور بے پناہ ہریالیوں اور پانیوں کی سرزمین کو دیکھ کر ہم مبہوت رہ گئے تھے۔ ہفتہ بھر قیام رہا۔ اصل منزل ڈھاکہ تھی ، مگر راجشا ہی بھی ہو آئے، جہاں ہمارا ایک سینئر بطور اسسٹنٹ کمشنر متعین تھا اور فی الحقیقت اس وزٹ پروگرام کا...
March 25, 2017
ہوشیار ! بھارت کچھ بھی کرسکتا ہے

31دسمبر2016ء کو کمانڈ سنبھالنے کے فوری بعد بھارت کے نئے آرمی چیف جنرل بپن راوت نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ پاکستان کے حوالے سے ہم ہمہ وقت چوکس ہیں اور سرحد پار سے ہونے والی کسی بھی کارروائی کا کسی بھی انداز میں جواب دینے کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔ روایتی ردعمل کے علاوہ کولڈ اسٹارٹ ڈاکٹرائن بھی ہمارے کارڈزپر ہے۔ یہ کولڈ اسٹارٹ...
March 14, 2017
امریکہ کو بھی پاکستان کی ضرورت ہے

پاک امریکہ تعلقات کی کہانی سات دہائیوں پر محیط ہے۔ ایک ایسی داستان جو اس سارے عرصے میں بے پناہ پرپیچ راہوںسے گزری ہے۔نشیب و فراز بھی بہت آئے اور سسپنس بھی کچھ کم نہیں رہا۔ ایک ایسی ریلیشن شپ جس کیلئے ہم نے کوئی خاص منصوبہ بندی نہیں کی اور جسے روزمرہ کی بنیاد پر چلایا گیا۔جو ہمیشہ سے غیرمتوازن تھی جس میں امریکہ کا ہمیشہ اپر ہینڈ...
March 07, 2017
ہماری فلم انڈسٹری کی تباہی : عوامل و عواقب

چند روز بیتے جناب حامد میر نے اپنے ایک کالم ’’ہم سب کی شان‘‘ میں بتایا کہ پرویز مشرف کے زمانے میں پاکستان اور بھارت کے مابین اعتماد اقدامات Confidence building measure کا سلسلہ شروع ہوا۔ تو صحافیوں، ادیبوں اور فن کاروں کو بھی ایک دوسرے کے قریب لانے کے لئے خصوصی وفود کے تبادلہ کا اہتمام ہوا۔ پاکستان سے جانے والے ایک ایسے ہی وفد میں اداکار شان...
February 14, 2017
کشمیر۔ افکار پریشاں!

کشمیر پر بھارت کی گائیڈ لائن وزیر اعظم جوہر لعل نہرو نے بہت پہلے متعین کردی تھی۔ 1962ء میں ایوب خان امریکہ گئے۔ صدر کینیڈی سے ملاقات کے دوران کشمیر بھی زیر بحث آیا، تو امریکی صدر نے دلجوئی کے چند کلمات کہہ دئیے۔ جس پر پنڈت نہرو آگ بگولہ ہوگئے تھے۔ فرمایاٖ: ’’کسی میں ہمت نہیں کہ بھارت کے ساتھ کشمیر کے الحاق کے مسئلہ کو ری اوپن...
February 01, 2017
ایک تاریخ ساز شخصیت

2 جولائی 1900ء کو یورپ کے ملک آسٹریا کے ایک یہودی گھرانے میں ایک بچے نے جنم لیا، جسے لیوپولڈ ویس کا نام دیا گیا۔ ہوش سنبھالا تو والدین نے محسوس کیا کہ یہ تو کوئی انوکھی چیز ان کے آنگن میں اتر آئی ہے۔ ایک مضطرب اور بے چین روح..... مذہب اور سماجی ضابطوں کا باغی، گھٹن بڑھی تو صرف 14برس کی عمر میں گھر سے بھاگ نکلا۔ پہلی عالمی جنگ کی ابتدا...
January 21, 2017
فیصل مسجد اس سلوک کی مستحق ہرگز نہیں!

اسلام آباد ایک نو آباد شہر ہے جس کی عمر کے انسان بھی پوری طرح سے بوڑھے نہیں ہوتے۔ فقط 55/60برس کی عمر عزیز۔ چنانچہ دنیا کے بڑے شہروں کے برعکس یہاں نہ صرف تاریخی عمارتیں ناپید ہیں، فن تعمیر کے اعتبار سے بھی ہم کوئی تیر نہیں مار سکے۔ فقط کنکریٹ کی چھوٹی بڑی ڈھیریاں ہیں جنہیں ایک وسیع و عریض خط زمین پر ضرورتاً کھڑا کر لیا گیا ہے مگر...
January 04, 2017
ماسکو کانفرنس۔ایک تجزیہ

27دسمبر کو ماسکو میں ایک عجیب و غریب قسم کی کانفرنس ہوئی۔ موضوع تھا ’’داعش کا بڑھتا ہوا خطرہ اور افغانستان کی بگڑتی ہوئی صورتحال‘‘۔ اس سہ فریقی اجتماع میں روس، چین اور پاکستان کے نمائندے شامل تھے اور جس ملک کے بارے میں اظہار تشویش کیا جا رہا تھا، اس کا دور دور تک نشان نہیں تھا۔ لطف کی بات یہ ہے کہ یہی مدعا لیکر روس، چین اور پاکستان...
December 21, 2016
قائد اعظم ؒ کیسا پاکستان چاہتے تھے؟

نا جانے قائد اعظمؒ اور ان کےافکار کے حوالے سے بعض لوگوں کے پیٹ میں وقفے وقفے سے مروڑ کیوں اٹھتا ہے۔ شاید ہم ایک ناشکری اور ناسپاس قوم ہیں کہ جس شخص نے ہمیں پاکستان جیسا لاجواب تحفہ دیا، اُسی کی کردار کشی کرتے ہیں اور اُسی پر بہتان باندھتے ہیں۔ ان کی عظمت کو دنیانے تسلیم کیا اور ہم ہیں کہ منصوبہ بندی کے تحت اپنے محسن کی ذات، سیاست اور...